New Age Islam
Wed Sep 23 2020, 05:38 AM

Urdu Section ( 17 Dec 2014, NewAgeIslam.Com)

Will You get Heaven by Killing the Innocent? معصوموں کی قبر پر چڑھ کر، کون سی جنت میں جاؤ گے؟

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

بی بی سی اردو

17 دسمبر 2014

پشاور میں آرمی پبلک سکول پر ہونے والے حملے کے بعد IndiawithPakistan# کا ہیش ٹیگ بھارت میں ٹاپ پر ٹرینڈ کرتا رہا ہے۔

پشاور میں حملے کے عنوان سے چلنے والا ہیش ٹیگ PeshawarAttack# سب سے اوپر ٹرینڈ کرتا رہا جس کےساتھ اب تک چھ لاکھ 90 ہزار سے زیادہ ٹویٹس کی گئی ہیں۔

بھارت کے شہریوں کی ایک بڑی تعداد نے پاکستانی بچوں پر کیے گئے ان حملوں پر اپنی رائےکا اظہار ان ہیش ٹیگز کا استعمال کر کے کیا اور طالبان کی سخت مذمت کی۔

ایک شخص نے لکھا: ’خون کے ناپاک یہ دھبے خدا سے کیسے چھپاؤگے، معصوموں کی قبر پر چڑھ کر، کون سی جنت میں جاؤ گے؟‘

ایک اور نے ٹویٹ کی: ’خون اور آنسوؤں کی کوئی قومیت یا مذہب نہیں ہوتا۔ یہ ہم میں سے کسی کے بھی ہو سکتے ہیں۔ ہم آپ کے درد کو سمجھتے ہیں۔‘

بھارتی صحافی ساگركا گھوش نے لکھا: ’آپ پاکستانی بھائی بہنوں کے درد کو سمجھتے ہیں جن کے بچوں کو طالبان نے مار ڈالا۔ ہمت، یک جہتی، امید۔‘

بی جے پی کے رہنما سدھیندر کلکرنی نے ٹویٹ کی: ’پشاور حملے میں مارے جانے والے بچوں کے خون کی کوئی قومی شناخت نہیں تھی اور نہ ہی ان کی غمزدہ ماؤں کی۔‘

بالی وڈ کی اداکارہ روينا ٹنڈن نے لکھا: ’پاکستان کے حکمرانوں سے یہ کہنا ہے کہ اس دکھ کی گھڑی میں ہم آپ کے ساتھ ہیں۔ مگر یہ سخت کارروائی کا وقت ہے۔ شدت پسندی بند کرو۔‘

اس کے برعکس پاکستان میں StopIndianTerrorisminPak# ٹرینڈ کرتا رہا جس پر انڈیا میں ردِ عمل سامنے آیا۔

شعیب خان لکھتے ہیں اس دکھ کی گھڑی میں ہم پاکستان کے ساتھ اپنا دکھ بانٹتے ہیں، جن کے خاندانوں کے بچوں کی موت ہوئی ہے ان کے لیے دعا۔‘

ويلڈ ڈذايرس کے ہینڈل سے ٹویٹ میں لکھا گیا: ’اگر میں کر سکتی تو ان تمام ماؤں کے سینے سے لگ جاتی، مگر میں ایسا نہیں کر سکتی۔‘

فیتھ گونزالس کہتے ہیں ’اس درد کو بیان کرنے کے لیے الفاظ کم پڑ گئے ہیں۔‘

پرتيوشا نے لکھا: ’ہمارے دل رو رہے ہیں۔ بچوں کی روح کو سکون ملے۔ سوچ سے باہر ہے کہ ان بچوں کے ماں باپ پر کیا گزر رہی ہوگی۔‘

سوميا كلشریشٹھ نے لکھا کہ ’بچو تمہاری چیخیں آنے والے برسوں تک انسانیت کے دل میں گونجتی رہیں گی۔‘

ایک ٹویٹ میں پشتو کی کہاوت شیئر کی گئی جو ہے کہ ’جب تمہارا بچہ مرتا ہے تو اسے دل میں دفناؤ۔ وہ تبھی مرتا ہے جب آپ مرتے ہو۔ میرا دل دكھتا ہے۔‘

مدن ساگليكر اور دوسرے کئی لوگوں نے اس ہیش ٹیگ کے ساتھ انگریزی میں ایک لائن ٹویٹ کی کہ ’چھوٹے تابوت شاید سب بھاری ہوتے ہیں۔‘

بہتوں نے اس ہیش ٹیگ کے ساتھ لکھا کہ یہ واقعہ انسانیت کی تاریخ پر سیاہ دھبہ ہے۔

پاکستان سے قیصر ملک نے ہیش ٹیگ کے ساتھ لکھا کہ ’کبھی نہیں سوچا تھا کہ ہیش ٹیگ اتنی اہمیت رکھتے ہیں۔ شکریہ ہندوستان (اور ہاں مجھے پتہ ہے کہ آج 16 دسمبر ہے)۔‘

شيرام حسن پوچھتے ہیں IndiawithPakistan# تو ٹھیک ہے پر کیا پاکستان پاکستان کے ساتھ ہے؟‘

منیش بید نے لکھا ’بچوں پر حملہ خدا پر حملے جیسا ہے۔ کئی بچوں کے والدین نے لکھا کہ وہ صدمے میں ہیں اور سن محسوس کر رہے ہیں۔

پرکاش سنگھ بشٹ نے لکھا کہ ’سورج کل بھی نکلے گا، پر اس کی دھوپ سے کھلنے والے کچھ پھول آج کم ہو گئے۔‘

ماخذ    http://www.bbc.co.uk/urdu/regional/2014/12/141216_indiawithpakistan_hashtag_tim

URL:

http://newageislam.com/urdu-section/bbc/will-you-get-heaven-by-killing-the-innocent?--معصوموں-کی-قبر-پر-چڑھ-کر،-کون-سی-جنت-میں-جاؤ-گے؟/d/100554

 

Loading..

Loading..