FOLLOW US:

Books and Documents
Urdu Section

Does Islam Promote Violence?  کیا اسلام قتل وغارت کی ترغیب دیتا ہے؟
Khama Bagosh Madzallah, New Age Islam

فتح مکہ کے بعد کعب بن اشرف اور خصوصاً اُم قرفہ جیسی ضعیف اور معزز عورت کا بہیمانہ قتل اس بات کی واضح دلیل ہے اسلام کے غلبے کے ساتھ ہی ایسے پرانے مخالفین کو قتل کیا گیا جنہوں نے کسی وقت میں رسول اللہ کے پیغام کی مخالفت کی تھی۔ فتح مکہ کے بعد بعض ایسے افراد کو بھی قتل کیا گیا جن کو قتل کرنے کی اجازت رسول اللہ نے خود دی تھی۔اُم قرفہ کی دونوں ٹانگیں دو اونٹ جو مخالف سمتوں میں دوڑائے گئے تھے اُن کی مدد سے چیر دی گئیں۔لیکن یہ بھی دیکھا گیا کہ کعب بن اشرف اور اُم قرفہ سے کہیں زیادہ اسلام دشمنوں اور ایسے افراد کو نہ صرف معاف کردیا گیا بلکہ اِنہیں نئی ریاست میں احترام بھی حاصل ہوا، جنہوں نے اپنی پوری زندگی اسلام کی دشمنی میں گزار دی تھی۔بعد میں زمانے نے دیکھا کہ صحابہ میں سے بعض نے اس دور کے مسلمانوں کو قتل کیا۔مالک بن نویرہ کا قتل اس کی واضح ترین مثال ہے جس کو حضرت خالد بن ولید نے نہ صرف قتل کیا بلکہ بغیر عدت پوری کیے اس کی بیوہ کے ساتھ فوری شادی بھی کرلی۔

 

حیرت انگیز طور پردی نیشن کے علاوہ کسی بھی اردو یا انگریزی اخبار نےحمید نظامی ہال میں منعقد اس  تقریر  کی کوئی  خبرنہیں شائع کی،حتی ٰ کہ نوائے  وقت نے بھی نہیں، جو کہ اس تقریر کے میزبانوں میں سے ایک تھا ۔ تاہم، اس نے  صرف ایک تصویر شائع کی ،جس میں  حافظ سعید اور ان کے ساتھیوں کو  ایڈیٹر ان چیف، نوائے وقت، مجید نظامی کے ساتھ ان کے چیمبر میں گفتگو کرتے ہوئے دکھا یا گیا ہے  ۔

 

They Do Not Understand Language of Reason And Peace  انتہا پسند ، انتہا پسند ہیں
Asghar Ali Engineer, Tr. New Age Islam

قرآن اور حدیث میں علم (علم ) پر بہت زیادہ زور دیا گیاہے ، اور سائنس اور سائنسی رویہ  کے نقیب ہونے کی بجائے ،مسلم انتہا پسند اتنے جاہل اور توہم پرست ہوتے جا رہے ہیں  ؟ اور وہ بندوق کی طاقت کے ذریعے مسلمانوں کو جہالت کے اندھیروں میں رکھنا چاہتے ہیں۔ در حقیقت جہالت کو  دور کرنا  اور ،روشن خیالی کے اس  دور کی قیادت کرنا  مسلمانوں کی ذمہ داری ہے  ۔ لیکن طالبان جدید تعلیم نہیں چاہتے ، خاص طور پر خواتین کے لئے، جدید ادویات نہیں چاہتے ہیں اور آزادی بھی نہیں چاہتے۔ اس کے بجائے وہ بندوق کی ثقافت پھیلا رہے ہیں۔ کیا یہ اسلام ہے؟ ہمیں طالبان کے خطرات کا مقابلہ کرنے والے نوجوان تیار کرنا ہے  اور یہ  پولیو کی لعنت سے کم نہیں ہے۔

 

No Time To Ponder Over Mysteries Of Existence  کیا ہے توُنے متاعِ غرور کا سودا
Aziz Bilgami

دنیائے رنگ و بو میں ہماری سانسوں کا سفر جاری ہے۔ دُنیائے دوں میں دھوپ بھی ہے اور چھاؤں بھی۔لمحاتِ غم بھی میسرہیں اور خوشی کے پل بھی۔ زندگی کی رنگا رنگی سے ہم مسلسل لطف اندوز ہو رہے ہیں۔لیکن ، ہمیں پسند ہو کہ ناپسند،زندگی کو بہرصورت اپنے اندازسے گزرنا ہے اوریہ اپنے انداز سے گزرتی جارہی ہے۔عصر جدید میں ہماری زندگی کو مصروف ترین ہونے کا شرف بھی حاصل ہے۔ کیوں کہ اِس کی رفتار بے حدتیز ہے، جیسے کوئی بہتا ہوا تندوتیز دریاہو۔ ہمیں وقت ہی میسر نہیں کہ کبھی کچھ سوچیں ، کچھ سمجھیں، کہ یہ زندگی کیا ہے اور کیوں ہے۔؟

 

فروری میں اسکاٹ لینڈ کی مسلمان  خواتین سرکاری طو رپر گھریلو تشدد کے خاتمے  کے لیے  ایک نئی  مہم کا آغاز  کریں گی۔ اگر چہ عورتوں  کے خلاف  تشدد  ایک عالمی مظہر  ہے جو قومیت ، نسل او رمذہب  کی بنیاد پر  کوئی تمیز  نہیں  برتتا لیکن کچھ  لوگ مسلمان ممالک  میں عورتوں  کے خلاف تشدد کو دیکھتے ہیں اور یہ نتیجہ  اخذ  کر لیتے ہیں  کہ اس کا لازمی  تعلق مذہب  کے ساتھ   ہے ۔ تاہم  برطانیہ  میں قائم  مسلمان عورتوں کی فلاح  تنظیم ‘‘ امینہ’’ کی رضا کار  عورتیں  دلیل  دیتی ہیں  کہ اس کے برعکس  اسلام کو عورتوں پر تشدد  کے خاتمے کے لیے حل کے طور پر دیکھا جانا چاہئے ۔

 
Revival of Islam اسلام کی تجدید
Maulana Wahiduddin Khan, Tr. New Age Islam

Revival of Islam   اسلام کی تجدید
Maulana Wahiduddin Khan

اسلام ، صوفیوں کے ذریعہ تشہیر  کردہ  دل پر مبنی  روحانیت (تزکیہ) کے خلاف ، دماغ پر مبنی روحانیت (تزکیہ ) کی تشہیر کرتا ہے ۔ دل پر مبنی روحانیت توہم پرستی سے اور ایسے تصورات سے متأثر ہے جو کہ لوگوں کو اس بات کا  یقین دلاتے ہیں کہ دل تزکیہ یا روحانیت کا مرکز یا مصدر ہے ۔ اس کے برعکس قرآن کی تعلیمات انسان کو غور فکر کرنے کی دعوت دیتی ہے ۔

 

Taliban Leader’s Pipedream: ‘We Will Conquer The World’  کیا موجودہ دنیا پر اسلام غالب آجائے گا؟

مولانا سمیع الحق جو اس وقت ستر کے پیٹے میں تھے،اُن کا دعویٰ تھا کہ طالبان انشاء اللہ پوری دنیا کو فتح کرلیں گے اوراگر کبھی امریکہ کے ساتھ بھی جنگ ہوئی تو امریکہ کو شکست دینا روس کو شکست دینے سے زیادہ آسان ہوگا۔اُنہوں نے فرمایا کہ سب سے پہلے تو بھارت کی اینٹ سے اینٹ بجائی جائے گی اور انشاء اللہ ملا عمر لال قلعہ میں بیٹھ کر نفاذ شریعت کا حکم جاری کریں گے۔میرے اس سوال پر کہ ہندوؤں کی اتنی بڑی تعداد کا کیا بنے گا؟ مولانا نے بتایا کہ ہندو پہلے بھی مسلمان فاتحین کے ہاتھوں عبرت ناک شکست سے دوچار ہوئے اُن کے لیے یہ کوئی نئی بات نہیں ہوگی۔وہ آسانی سے اسلام قبول کرلیں گے یا دوسرے درجے کے شہری(ذمی) بن کر جزیہ دیں گے۔البتہ ہندو انتہا پسند اور اسلام دشمن تنظیموں اور اُن کے لیڈروں کے لیے کوئی معافی نہیں ہوگی۔جیسے نجیب اللہ کو سرعام پھانسی دی گئی یہاں بھی ایسی پھانسیاں دی جائیں گی۔اس کے بعد چین کو دعوت اسلام دی جائے گی اور شیعہ ایران کو بھی حکم دیا جائے گا کہ اسلام قبول کرو نہیں تو مرنے اور جزیہ دینے کے لیے تیار ہوجاو۔

 

Tampering with the laws of the Quran and Sunnah    قرآن و سنت کے احکام و اصول میں تبدیلی
Maulana Abdul Hameed Nomani

حضرت نظام الدین اولیا رحمۃ اللہ علیہ یا دیگر موقر صوفیہ کا سماع  او رمروجہ  موسیقی با لکل دونوں الگ الگ  چیزیں ہیں۔ ترمذی او رابن ماجہ میں حضرت عمر رضی اللہ عنہ کی یہ روایت موجود ہے ، جس میں انہوں نے گانے والی عورتوں کی اُجرت اور گانا دونوں کو حرام قرار دیا  ہے۔ حضرت مشائخ  چشتیہ خصوصاً حضرت نظام الدین اولیا رحمۃ اللہ علیہ  کے نزدیک سماع  کے جائز  ہونے کی یہ شرائط  ہیں کہ محفل سماع  میں سنانے والا معمر ،  جوان ہو، بے ریش (بغیر داڑھی ) لڑکا  یا عورت نہ ہو، سننے والا یا دِ حق  سے خالی نہ ہو۔ کلام ، اشعار فحش  او ربیہودہ نہ ہوں۔ آلات سماع مزا میر ، چنگ رباب وغیرہ نہ ہوں۔

 

A Harmonious Marriage  کامیاب ازدواجی زندگی قر آن کی روشنی میں
Asghar Ali Engineer,Tr. New Age Islam

خواتین کے حقوق کے تعلق سے  قرآن نے جو احکام بیان کئے وہ کافی انقلابی تھے۔ اس نے خواتین کو وہ دیا جو اس وقت کسی عورت نے سوچا بھی  نہیں ہو گا ۔ اس کے با وجود اس وقت خود خواتین کے درمیان ،شدید رکاوٹیں اور شعور کی بہت کمی تھی ۔ اب وقت تیزی سے بدل رہا ہے اور خواتین کا شعور اب وہ  نہیں ہے، جو اس وقت تھے جب علماء شرعی قوانین کی تشکیل کر رہے تھے۔ پورے الہی متن کا مقصد ، ہمارے اپنے وقت کے اعلیٰ بصیرت کے ساتھ، تبدیلی پیدا  کرناہے۔ یہ نہ صرف قرآن کا مطالعہ بہت گہرائی کے ساتھ کرنے کا مطالبہ کرتا ہے، بلکہ اس سے زیادہ قرآن  کی حقیقی بصیرت  پر توجہ مرکوز کرنے کا مطالبہ کرتا ہے۔

 
Respecting Muslim Caliphs مسلم خلفاء کا احترام
Mike Ghouse Tr. New Age Islam مائیک غوث

Respecting Muslim Caliphs   مسلم خلفاء کا احترام
Mike Ghouse Tr. New Age Islam

مجھے  اس بات کا یقین نہیں ہے ، کہ احمدیہ مسلمانوں کو ہراساں کرنے اور ظلم و ستم کے لئے، سنی مسلمانوں کو ذمہ دار ٹھہرایا جانا چاہئے ، یا اس کی وجہ ضیاء بھٹو اتحاد کا آمرانہ نظام حکومت تھا ، جس نے  ان کے دور میں بہت سے لوگوں کو سوچنے کی  تحریک دی ۔ اگر یہ ضیاء بھٹو اتحاد تھا، تو ان کے چلے جانے  کے ساتھ ہی ختم ہو جانا چاہئے ، کیوں یہ جراثیم اندر ہی اندر پھیل گئے، اور پاکستانی سرحدوں سے باہر چلے گئے؟

 

حال ہی میں پاکستان کے سیاسی منظر نامے پر طاہرالقادری کے ظہور نے حکومت  کے توازن  کو تبدیل کر دیا  ہے اور نئے اتحاد  بن رہے ہیں اور پرانے اتحاد ٹوٹ  رہے ہیں۔ اس نے  پیپلز پارٹی کو طالبان کے تئیں  نرم پڑ  جانے پر مجبور کر دیا ہےجس نے  ملک میں نہ صرف معصوم شہریوں کا قتل کیا ہے بلکہ ان کے کچھ بڑے سیاستدانوں اور رہنماؤں کو بھی  مار ڈالا ہے۔ ایک ایسی صورت حال میں  جب  پیپلز پارٹی خود کو ایک مصیبت  میں پا رہی ہے ، طالبان کی  ظاہر یا خفیہ حمایت حکمران جماعت کے  لئے ایک عظیم تعاون ثابت ہو گی ۔ یہی وجہ ہے کہ‘‘ سرحد پار دشمن ’’ کی سازش کو  'ظاہر' کرتے ہوئے ، طالبان کو کلین چٹ دے دی گئی ہے ، اور یہ  تأثر پیدا کرنے کی کوشش کی گئی ہے  کہ کراچی میں رونما ہونے والے  کسی بھی دہشت گردی کی کاروائی  کے پیچھے ہندوستان کا ہاتھ ہو گا ۔

 

مجموعی طور پر، تمام شرکاء اور سامعین اس بات  پر متفق تھے کہ تصوف ہی اصل اسلام ہے،اور اسلام سے اسے الگ کرنے کی تمام کوششوں کا مقابلہ پر امن طریقے اور نظریاتی طور پر کیا جانا چاہئے، جیسا کہ تصوف کثیر ثقافتی اقدار کو فروغ دیتا ہے، جو کہ ہندوستانی زمین کا جوہر ہے۔ تصوف محبت، رحم دلی، رواداری اور بھائی چارہ سکھاتا ہے، جو کہ دور جدید کے کثیر ثقافتی اور پیچیدہ دنیا کی ضرورت ہیں ۔

اپنی اختتامی تقریر میں ڈاکٹر فاطمہ نے کہا کہ ہمین صوفیہ کی تعلیمات کے ذریعے ہمدردی اور رواداری کے پیغام کو پھیلانے کے لئے اجتماعی طور پر  کام کرنا چاہئے، اور اپنے کھو ئے ہوئےورثے اور اقدار کی بازیافت کرنی چاہئے۔ ہمیں غالب ہندو کمیونٹی کی وسعت نظری  اور رواداری کوبھی قبول کرنا چاہئے ، جنہوں نے تصوف کو قبول  کیا اور مختلف مذاہب اور ثقافتوں کے تمام اچھے عناصر کو ضم کر لیا  اور ایک تکثیری ثقافت کی تشکیل کی  جسے ہندوستان کہا جاتاہے۔

 

Nursi’s Islamic Model for Modern Muslims  نورسی  دور جدید کے مسلمانوں کے لئے اسلامی ماڈل
Ghulam Rasool Dehlvi, New Age Islam

نورسی نے  مسلمانوں کو مغرب کے متحرک جذبے، دانشورانہ روایت اور ٹیکنالوجی کو اپنانے کی حوصلہ افزائی کی، مگر  اس کے یورپی استعماریت، سرمایہ دارانہ نظام کے  اقتصادی استحصال، مارکسزم کے الحاد اور سیکولرزم کے اخلاتی دیوالیہ پن کی مذمت کی۔. ان کا یقین   ہے کہ اسلام مسلم معاشروں کے لئے مذہبی سیاسی متبادل فراہم کرتا ہے، اور اسی لئے  انہوں نے ماضی کی طرف مراجعت کی تاکہ  جدید مسلم معاشروں کے لئے  ایک اسلامی ماڈل کی تشکیل نو کے لئے، لازمی  انسانی اصول اور آفاقی اقدار کی بازیافت کر سکیں۔

 

Is Religious Freedom under Attack in America?  کیا امریکہ میں مذہبی آزادی کو خطرہ لاحق  ہے؟
Mike Ghouse Tr. New Age Islam

بلا شبہ ، ہر جماعت  کو لگتا ہے کہ ان کی مذہبی آزادی کو خطرہ لاحق ہے۔ کیا تاریخ میں ایسا کوئی  وقت رہا ہے جب کسی جماعت کو اپنے ہم  مذہب لوگوں سے  ، دیگر مذاہب اور حکومتوں سے خطرہ نہ  محسوس ہوا ہو  ؟ یہاں ایک مختصر تاریخ اور ممکنہ حل کا بیان کیا جا رہا  ہے۔

یہودی ہمیشہ خطرے  میں رہے ہیں۔ انہوں نے اسپین میں تحفظ  محسوس کیا، جسے  Ferdinand نے  تباہ کر دیا تھا ۔ اس کے بعد انہوں نے جرمنی میں تحفظ  محسوس کیا، لیکن ہولوکاسٹ نے انہیں ریزہ ریزہ کر دیا  اور انسانیت سے ان کا  یقین اٹھ گیا ۔

Love, Sex and Marriage in the Quran   قرآن مجید میں محبت، جنسیت اور نکاح
Muhammad Yunus, New Age Islam

تاریخی طور پر، اکثر معاشروں میں، شادی سے پہلے محبت کی مذمت کی گئی ہے، جبکہ شادی میں میاں بیوی اکثر اپنی محبت چھپاتے ہیں ۔یہ  اس وجہ سے  تھا کیونکہ مرد اور عورت کے درمیان محبت کے  احساس کو  حقارت کی نگا ہ یا شاید حسد کی نگاہ سے دیکھا جاتا تھا ، جبکہ شادی کو افزائش نسل  کے  مقصد سے خالصتاً حیاتیاتی ضرورت شمار کیا جاتا  تھا۔ آیت مخالف جنسوں کے درمیان روحانی اور جذباتی لگاو  کو تسلیم کر تی ہے، اور انسانوں سے اس پر غور و فکر کا مطالبہ کرتی  ہے ۔ مزید برآں، علم لسانیا ت کے اعتبار سے ازواج  (میاں بیوی) کا لفظ  مخالف جنسوں کی ایک جوڑے کی طرف اشارہ  کر نے والا ہے  ، جو ایک سماجی معمول کے طور پر ایک نکاح کی طرف اشارہ کرتا ہے، اور جوڑے  میں سے  کسی  ایک کو بھی دوسرے پر  فوقیت نہیں دیتا  ۔

 

Are Women Inferior Creatures? کیا عورت تیسرے درجے کی مخلوق ہے؟
Asad Mufti

حضرت عبدالرحمن بن عوف کا یہ مشہور واقعہ بیشتر کتابوں میں درج ہے کہ جب ان کے انصاری بھائی حضرت سعد بن ربیع نے یہ پیشکش کی کہ میں اپنا نصف مال منال تمہیں بانٹ دیتا ہوں اور میری دو بیوی ہیں ان کو دیکھ لو اور جو پسند آ جائے اس کا نام بتاؤ، میں طلاق دے دوں گا، عدت گزارنے کے بعد تم اسے نکاح میں لے لینا۔“ کیا اس اسلامی واقعہ سے آپ کو عورت ایک جنس، مال، چیز یا شے دکھائی نہیں دیتی؟ اس کے تمام جذبات، محبت، وفاداری، خلوص چاہت کی باگ ڈور بغیر سوچے سمجھے اور دیکھے بھالے کسی دوسرے کے سپرد کی جارہی ہے جیسے عورت نہ ہوئی کھیتی ہوگئی۔

Sharia Is Not and Cannot Be Immutable   شریعت تغیر پذیر نہیں ہے اور نہ ہی کبھی ہو سکتی ہے
Asghar Ali Engineer,Tr. New Age Islam

ہمیں موجودہ دور میں جو کہ ناانصافی سے بھرا ہوا ہے قرآن کے مشن کو پورا کرنے کے لئے ایسے مذہبی علماء کی ضرورت ہے  جو صاحب بصیرت ہوں ۔ ہمارا معاشر ہ صنفی ناانصافیوں سے لبریز  ہے اور قرآن کا  مرکزی اقدار  انصاف ہے - زندگی کے تمام شعبوں  میں انصاف ۔ صنفی انصاف پر بھی  ، سماجی اور اقتصادی معاملات میں انصاف کی طرح بہت شدو مد کے ساتھ  زور دیا گیا ہے۔

صنفی انصاف پر زور دینے کے لئے یہ ضروری ہے کہ  ہے کہ ہم عربی زبان میں ماہر  مذہبی عالمات پیدا کریں ۔ اس لئے کہ انتہائی  قدامت پسند علماء بھی مذہبی عالمات کے تصور کی مخالفت نہیں کر سکتے۔

 

انتہائی  بدقسمتی کی بات یہ ہے کہ اسلامی یا مسلم اکثریتی حکومت  میں سے کسی نے  بھی سروے میں 1  ایک پوائنٹ نہیں حاصل کیا    ۔ امریکہ، برطانیہ، جرمنی، فرانس، آئرلینڈ، ناروے، نیوزی لینڈ، نیدر لینڈ وغیرہ دونوں سیاسی حقوق اور شہری آزادیوں میں 1 نمبر پر ہیں   ۔وہ تمام عیسائی ممالک ہیں جہاں مسلمانوں اور دوسرے مذاہب کے پیروکاروں کی ایک بڑی اقلیت آباد ہے  ۔مسلمانوں اور اسلامی ممالک کے حکمرانوں  کے لئے  مذہب  کے تئیں متشدد  نقطہ نظر  کو ترک کرنے  ، اور جدید دنیا کے کثیر ثقافتی ضروریات  کے وسیع تر تناظر میں اپنی  اجتماعی زندگی کے مسائل  کو ختم کرنے کا وقت آپہنچا ہے  ۔

 

سندھ میں صوفی سندھ کا تو فیبرک اس دن ہی ادھڑ گیا تھا جب انیس سو ستانوے میں ٹھٹھہ ضلع کے ایک پُرسکون نیلگوں جھیل کینجھر اور مرتے ہوئے کھجوروں کے درختوں والے چھوٹے سے پُرسکون شہر جھمپیرمیں پاراچنار کے ایک صوفی اور اس کے بھانجے کو عید کے دن بعد نماز عید ایک ہجوم نے سنگسار کردیا تھا۔ پارا چنار سے فرقہ وارانہ خونریزی کے خلاف آواز بلند کرنے پر اپنا آبائی شہر ترک کر کے سندھ کے جھمپیر شہر میں اپنا آستانہ بنانے والے صوفی کے خلاف دوران خطبہ عید ایک مولوی نے نمازیوں کو بھڑکایا تھا اس کا تعلق سجاول شہر کے ایک مدرسے سے تھا۔

 

نبی صلی اللہ علیہ وسلم  کے زمانے میں ایک مسلمان نے ایک غیر مسلم کو قتل کیا تو آپ صلی اللہ علیہ وسلم  نے اُس مسلمان کے قتل کا حکم دیا اور فرمایا ‘‘اپنے ذمی (اقلیتی شہری) کو وفا کرنے کا سب سے زیادہ حق دار میں ہوں’’۔اسلامی تعلیمات کے مطابق ذمی کو زبان یا ہاتھ سے تکلیف پہنچانا، اس کو گالی دینا، مارنا پیٹنا یا اُس کی غیبت کرنا اسی طرح ناجائز ہے جس طرح مسلمان کے حق میں یہ افعال ناجائز ہیں۔ایک اسلامی ریاست کے کسی اقلیتی شہری کو تو یہ حق حاصل ہے وہ اس ریاست سے اپنا عہد ختم کر کے کسی دوسری ریاست میں جا کر بس جائے۔

 

Raja Ji at the Feet of Khwaja Ji  راجہ جی کو خواجہ جی نے بلایا
Asar Chauhan

‘‘ شہاب اُلدّین محمد غوری کو، 2شعبان 602ھ ( 13مارچ 1206ء ) کو غزنی میں، اُس عمارت میں دفن کِیا گیا تھا ، جو اُس نے اپنی بیٹی کے لئے بنوائی تھی ’’۔ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے۔ ( نہ جانے تاریخ کے کِس حوالے یا روایت کی بنیاد پر)۔ جہلم کے قریب سوہاوہ میں ، نہ جانے کِس شخص کی قبر کو ،شہاب اُلدّین غوری کی قبر مشہور کر دیا اور اُس کی تزئین و آرائش بھی کرائی ۔ایک اور بات کہ ۔بھارت نے اپنے دیوتاﺅں۔ آکاش ( آسمان) ۔اگنی (آگ)۔اور پرتھوی ( زمین)۔ کے نام پر میزائل بنائے ۔ڈاکٹر عبدالقدیر خان نے یہ سمجھ کر کہ بھارت کا میزائل ۔‘‘ پرتھوی’’۔(زمین)۔ پرتھوی راج چوہان کے نام پر بنایا گیا ہے ، اُس کے مقابلے میں، پاکستان کے ایک میزائل کا نام شہاب الدّین غوری کے نام پر ۔”

 

Innocent Muslims of Pakistan  پاکستان کے سادہ مسلمان
Tayyaba Zia Cheema

آج کا مسلمان تعلیم انگلینڈ میں حاصل کرنا چاہتا ہے ،ملازمت امریکہ میں کرنا چاہتا ہے ،رہنا کینیڈا میں چاہتا ہے ،بات انگریزی میں کرنا چاہتا ہے ،کھانا چائنز رائس،اٹالین پیزااور رشین سلاد چاہتا ہے ،مصنوعات جاپانی استعمال کرنا چاہتا ہے ،چھٹیاں یورپ میں گزارنا چاہتا ہے فلمیں ہالی ووڈ کی دیکھنا چاہتا ہے ،گانے بالی ووڈ کے سننا چاہتا ہے لیکن زندگی کے اختتام پر مرنا مکہ میں چاہتا ہے ،تدفین مدینہ میں چاہتا ہے اور موت کے بعد جنت میں جانا چاہتا ہے۔آج کا مسلمان بڑا سادہ ہے ۔

Fatima: An Ideal Personality  فاطمہ زہرا رضی اللہ عنہ: ایک مثالی کردار
Dr. Raihan Hasan

اگر حضرت علی رضی اللہ عنہ و فاطمہ رضی اللہ عنہ  کے اس اصول پر زن و شوہر عمل پیرا  ہوجائیں تو گھر والوں میں ایسی فضا قائم ہوسکتی ہے کہ جس سے گھر  سکون و اطمینان  کا گہوراہ بن سکتے ہیں ۔ اگر یہ کہا جائے تو غلط نہ ہوگا کہ حضرت  فاطمہ  زہرا رضی اللہ عنہ جیسی مطیع و فرمانبردار ہم کارو مددگار زوجہ کی نظیر  دنیا  لانے سے قاصر  ہے ۔ مگر  ضرورت اس بات کی ہے کہ شہزادی  سلام اللہ علیہا کی مثال زندگی  کو نمونہ عمل بنایا جائے تاکہ گھر  جنت  نظیر بن سکے ۔ اور دنیا آخرت  کی نعمتوں سے بہرہ  ور ہونے کا موقع فراہم ہوسکے ۔

Understanding the Anger and Frustration of Muslim Youths    اتر پردیش میں مسلم نوجوانوں کے غصے اور مایوسی کا ادراک
Vidya Bhushan Rawat, New Age Islam

یقیناً ، قتل پہلی نظر میں ہی ایک جرم لگتا ہے ، لیکن اس میں فرقہ وارانہ عنصر بھی  ہے۔ اس کی اچھی طرح منصوبہ بندی کی گئی تھی ,اور سیاستدان ان کے اپنے فوائد کے لئے، نئے حالات پیدا کرنے میں ماہر ہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ اس قسم کے زیادہ تر  احتجاج انتظامیہ کے ساتھ مسلمانوں سے نفرت کی انتہائی  تکلیف دہ علامات ہیں۔ ہر روز وہ ، دہشت گردی کے خلاف جنگ کے نام پر انتظامیہ کے حملے کا سامنا کرتے ہیں۔ ان کو نشانہ بنایا جا رہا ہے، اور نوجوانوں کو پولیس کے ذریعہ گرفتار کیا جا رہا ہے۔

 

اس سیمینار کے انعقاد کا مقصد صوفی کلچرکو موجودو تناظر میں دیکھنے اور موجودہ زما نے میں اس کی معنویت کی بازیافت کرنا ہے کیونکہ موجودہ دور میں ہم ایک جدید معاشرے میں رہنے کا دعوی کرتے ہیں مگر ہمارا معاشرہ فرقہ واریت اور جنسی عدم توازن کا شکار ہے۔  ہمیں اپنے ماضی پر دوبارہ نظر ڈالنے، اس کے احیاء اور اپنی ثقافت کی بازیافت کی ضرورت ہے تا کہ ہم ان تمام تعصبات کا تدارک کرسکیں جو ہمارے معاشرے میں سرایت کر چکے ہیں۔ اس سلسلے میں ہمیں صوفی کلچر کے امکانا ت اور موجودہ دور میں اسکی جہات کی معنویت کی تلاش کی ضرورت ہے۔

 
1 2 ..35 36 37 38 39 40 41 42 43 44 ... 75 76 77


Get New Age Islam in Your Inbox
E-mail:
Videos

The Reality of Pakistani Propaganda of Ghazwa e Hind and Composite Culture of IndiaPLAY 

Global Terrorism and Islam; M J Akbar provides The Indian PerspectivePLAY 

Shaukat Kashmiri speaks to New Age Islam TV on forced conversions to Islam in PakistanPLAY 

Petrodollar Islam, Salafi Islam, Wahhabi Islam in Pakistani SocietyPLAY 

NEW COMMENTS