FOLLOW US:

Books and Documents
Urdu Section

The Right Message of Islam- Part - 2  (اسلام کا صحیح پیغام  (آخری قسط
Zafar Agha

لب لباب یہ کہ جب عرب کے میدانوں سے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم نے اسلام کی صدا بلند کی تو اس وقت انسانیت کو روحانی یا مذہبی آزادی بھی حاصل نہیں تھی ۔ بندے کے عقیدے کے درمیان ایک درمیانی شخص (Middle Man) تھا جو بندے کے روحانی اور عقائد کے معاملات پر قادر تھا۔ اس کےبرخلاف رسول صلی اللہ علیہ وسلم نے ایک ایسے رب کا تصور پیش کیا جو نہ صرف رب العالمین ہے بلکہ قادر مطلق بھی ۔ اللہ نے اپنے رسول کے ذریعہ اپنے ماننے والوں کے لئے حق و باطل اور اچھے برے معاملات طے کردیئے اور بندے کو یہ آزادی و اختیار دے دیا کہ وہ اپنے اعمال خود طے کرے جس کی بنا پر کسی کی مداخلت یا سفارش کے بغیر روز  قیامت بندے کی جزاو سزا اس کا رب طے کرے گا جو اس کے رب کا ابدی فیصلہ ہوگا۔

 

The Right Message of Islam- Part - 1  (اسلام کا صحیح پیغام  (قسط اوّل
Zafar Agha

ساری دنیا میں ان دنوں محض ایک ہی مسئلہ زیر بحث ہے اور وہ ہے داعش  کے بڑھتے ہوئے قدم ۔ مغرب کو اب یہ خطرہ لاحق ہوگیا ہے کہ امریکہ پر القاعدہ کے حملے کی طرح داعش بھی کہیں مغرب کے کسی حصے پر حملہ نہ کردے۔ اس خوف کے سبب مغرب میں اسلام اور مسلمان دونوں میں زبردست دلچسپی  پیدا ہوگئی ۔ آخر اصل اسلام کیا  ہے؟ کیا اسلامی عقیدہ واقعی دہشت گردی پر مبنی ہے؟ جہاد کیا ہے؟ مسلمان جہاد کے نام پر خود اپنی جان دینے کو کیوں تیار ہوجاتے ہیں؟ اسی طرح کے درجنوں سوالات مغرب میں ان دنوں اسلام اور مسلمانوں  کے تعلق سے زیر بحث ہیں ۔

 

اس وقت پوری دنیا کو جس چیز کی سب سے زیادہ ضرورت ہے، وہ امن و سکون ہے، اس امن و سکون کی تلاش میں دنیا سر گرداں او رپریشان ہے،  غاصب ، ظالم اور جابر حکمراں بھی ملکوں کو تاراج کرنے کےلئے قیام امن ہی کانعرہ لگاتے ہیں ، خواہ ان کے اس اقدام کے نتیجے میں کتنی  ہی بدامنی ، دہشت  گردی اور ظلم و ستم کا بازار کیوں نہ گرم ہو، باتیں امن  کی ہی کرتے رہیں گے، موٹو امن کا ہی استعمال کریں گے، سلوگن امن و شانتی ہی ہوگا، لیکن پوری دنیا اس بات کو اچھی طرح جانتی ہے کہ یہ زمینوں اور اس کے وسائل  کو ہڑپ کرنے کی جد وجہد ہے، اس کا امن و سکون شانتی اور چین سے کچھ لینا دینا نہیں ہے ۔

 

Killing a Human Being is the Biggest Mischief and the Most Prohibited  کسی انسان کا قتل سب سے بڑا فتنہ اور حرام ہے: امام کعبہ

سعودی مفتی اعظم نے مسلم حکمرانوں کو نصیحت کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ دین کی سر بلندی کی کوششیں  کریں، حکمران اپنی ذمے داریاں  اداکریں اور نہ بھولیں کہ وہ اللہ کےسامنے جوابدہ ہیں،مسلمان حکمران آپس میں تعاون کریں، حکمرانوں پر بڑی ذمےداری ہے کہ وہ تقویٰ اختیار کریں ، اپنے عوام کو تعاون کے ساتھ مشکل سے نکالیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم ایک ایسے  دور میں رہ رہے ہیں جو سازشوں کا دور ہے ، دین کے دشمن مسلسل سازشوں میں مصروف ہیں۔ مسلمانوں  کو مخاطب کرتے ہوئے ا نہوں نے کہا کہ اے مسلمانو! اس زمانے کے میڈیا کا معاشرے میں اصلاح لانے کیلئے  اہم کردار ہے، عالم اسلام کا میڈیا اپنی ذمے داری ادا کرے، میڈیا کامقصد یہ ہو کہ وہ معاشرے میں اصلاح اور خیر کادرس دے، مسلم میڈیا کی ذمہ داری یہ بھی ہے کہ وہ سچائی اور حق کاعلم بلند رکھیں ۔ انہوں نے کہا کہ خارجیوں نے فساد برپا کر رکھا ہے ، ایک انسان کا قتل پوری انسانیت کا قتل ہے ۔

 

خطبہ حجۃ الوداع کو اسلام میں بڑی اہمیت حاصل ہے ۔ خطبۂ حجۃ الوداع بلاشبہ انسانی حقوق کا اوّلین  اور مثالی منشور اعظم ہے۔ اُسے تاریخی  حقائق کی روشنی میں انسانت کا سب سے پہلا  منشور انسانی ہونے کا اعزاز ہے۔ اس منشور میں  کسی گروہ کی حمایت کوئی نسلی ، قومی مفاد کسی  قسم کی ذاتی غرض وغیرہ کا کوئی شائبہ نظر تک نہیں آیا۔ ذی قعدہ 10 ہجری میں آقا صلی اللہ علیہ وسلم  نے حج کا ارادہ کیا، یہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کا پہلا اور آخری  حج تھا ۔ اسی حوالے سے اسے ‘‘ حجۃ الوداع ’’کہا جاتا ہے ۔ یہ ابلاغ اسلام کی  بنیاد پر ‘ حجۃ الاسلام ’، حجۃ التمام ’ اور حجۃ البلاغ’ کے نام سے بھی موسوم ہے۔ اس حج کے موقع پر آقا صلی اللہ علیہ وسلم  نے جو خطبہ ارشاد فرمایا اسے ‘‘ حجۃ الوداع ’’ کہتے ہیں آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے حکم سے قصواء اونٹنی پر کجاوا کسا گیا اور آپ صلی اللہ علیہ وسلم قصواء اونٹنی  پر سوار ہوکر بطن وادی میں تشریف لے گئے اس وقت آپ صلی اللہ علیہ وسلم  کے گرد ایک لاکھ چوبیس ہزار  یا ایک لاکھ چوالیس ہزار انسانوں کاسمندر ٹھاٹھیں  ماررہا تھا آپ صلی اللہ علیہ وسلم  نے ان کے سامنے ایک جامع خطبہ ارشاد فرمایا ۔

 

Defamation of Islam! (Part – 2)  (اسلام کی بدنامی! (آخری حصہ
Zafar Agha

مسلمانوں کے نزدیک یہ وہی مغرب ہے ، جو صلیبی  جنگوں کے دوران کا دشمن تھا، جس نے اسلام اور مسلم تہذیب کو ختم کرنے کا بیڑا اٹھایا تھا ۔ یہی سبب ہے کہ مسلمانوں نے مغرب کو ہمیشہ  اپناسیاسی  اور تہذیبی دشمن سمجھا ، تب ہی  تو انیسویں  صدی کے تمام مسلم  مفکرین نے مغرب کو پوری طرح  سے رد کردیا ۔ دوسرے معنوں  میں یہ کہ مسلمانوں نے سائنسی  ٹیکنالوجی ، تعلیمی اور سیاسی و سماجی انقلاب کو بھی ر دکردیا اور اس کےبرخلاف قرون وسطیٰ کی ان سیاسی و سماجی  قدروں کو اصل اسلام سمجھ لیا، جس میں اس نے سُپر پاور کا رتبہ حاصل کیاتھا ۔ مثلاً  جمہوری  خلافت راشدہ  کی جگہ بادشاہت  کو ہی مسلمانوں نے اصل  اسلامی سیاسی نظام سمجھ لیا،  جو کسی نہ کسی  صورت میں آج بھی زیادہ تر مسلم معاشرہ میں  رائج ہے۔ تب ہی تو داعش جیسی تنظیم لوگوں کو ذبح کررہی ہے ۔

 

The wave of ethnic hatred in Germany  جرمنی میں نسلی منافرت کی لہر
Asad Mufti

گزشتہ دنوں انٹرنیشنل یونین آف جرنلٹس کے حوالے سے منعقد ہونے والی ایک کانفرنس میں شرکت کیلئے جب میں برلن میں تھا تو جرمن اخبارات و رسائل کے مطالعہ سے پتہ چلا کہ نسلی تشدد کی ایک شدید لہر نے ان دنوں جرمنی کو اپنی لپیٹ میں لے رکھا ہے ۔وہاںنسلی منافرت تیزی سے پھیل رہی ہے اور اقلیتوں کو نسلی طور پر ہراساں کیا جارہا ہےاور حملوں میں اضافہ ہوتا جارہا ہے جس کا نشانہ وہاں کی سب سے بڑی(مسلم ) اقلیت بن رہی ہے۔

 

Defamation of Islam! (Part - 1)  (اسلام کی بدنامی! ( حصہ اوّل
Zafar Agha

اسلام ہی ایک ایسا مذہب ہے ، جس نے اللہ اور بندوں کے درمیان سے ہر قسم کے راہب،  پنڈت اور درمیانی لوگوں کو خاتمہ کیا ۔ یہ ہے نچوڑ اسلام کا، جس کا رب رحیم اور جس کے رسول کریم  ہیں، جنہوں نے دنیا میں ہر انسان ( بشمول خواتین) کو برابری کا درجہ دیا ۔ یعنی اسلام نے انسانیت کو آزادی اور اخوت  کی ایسی منزل تک پہنچایا، جس کا تصور اسلام سے قبل نہیں پایا جاتا تھا ۔ تب ہی تو پورے قرون وسطیٰ میں مسلمان سُپر پاور بنے رہے اور اسلام کا ڈنکا ہر سو بجتا رہا ۔ آج اسی اسلام اور مسلمانوں کو دہشت سے جوڑا جارہا ہے ۔ آج محسن انسانیت  صلی اللہ علیہ وسلم کی شان میں گستاخی کی ناپاک جسارت کی جارہی ہے۔

 

Listen, Muslim Parent  !مسلم والدین توجہ فرمائیں
Javed Anand

آپ کو لگتا ہوگا کہ آپ کا بیٹا کبھی یہ پر تشدد راستہ اختیار نہیں کرے گا۔ لیکن کلیان کے غمزدہ اور پریشان والدین نے بھی کبھی نہیں سوچا تھا کہ ان کے لڑکے یہ راستہ اختیار کریں گے۔ لہذا مسلم والدین دوبارہ غور و خوض کریں۔ پریشان ہونے کی ضرورت نہیں۔ لیکن یہ ضروری ہے کہ آپ اس اسلام سے واقف ہوں جو مدارس، مساجد اور اسلامی مراکز میں آپ کے نونہالوں کو پڑھایا جا رہا ہے۔ ذاکر نائک کے پیس ٹی وی چینل کو غور سے دیکھئے۔ آپ کو سمجھ آجائےگا کہ اس کا امن و آشتی اور Peace سے کوئی رشتہ ہے ہی نہیں۔ یہ محض دوسروں پر مسلم بالا دستی کی بات کرتا ہے۔ ہمارے درمیان اسلام کی مختلف تشریحات و توضیحات پائی جاتی ہیں۔ ہمیں خاص طور سے ان سے محتاط رہنے کی ضرورت ہے جن کا تعلق سیاسی اور جہادی نظریہ پر مبنی متشدد اسلام سے ہے….. لہذا، محتاط رہیئے، کہیں آپ کا لخت جگر سیاسی اسلام کے نظریات سے متاثر نہ ہوجائے۔ اگرچہ ضروری نہیں کہ اس کا شاخسانہ ہمیشہ تشدد پسند جہادی نظریہ کی شکل میں ہی نمودار ہو، لیکن اسلامی ریاست کا خواب اسلام کے نام پر ہورہے سفاکانہ جرائم کی طرف راہ ہموار کرتا ہے۔ یقینا، میرا خیال تو یہ ہے کہ آپ جیسے مسلم والدین سیاسی اسلام کے نظریات کے خود بہ خود شکار نہیں ہوتے۔ اور اگر ایسا ہوتا ہے، تو پھر دوستو میں کیا عرض کروں؟

 

ہندوستان میں مسلمانوں نے ہمیشہ حلال و حرام کی سرحدوں کو باقی رکھا ہے اور معتبر اور دین دار مسلمانوں نے کبھی غیر مسلم لڑکیوں کو بحیثیت  منکوحہ اپنانے  کی کوشش نہیں کی، بعض  لوگ اکبر کی جودھا بائی سے شادی کا ذکر کرتے ہیں، لیکن یہ شادی  راجپوتوں کی رضا مندی  ، بلکہ  رغبت کی بنیاد پر ہوئی تھی  اور اکبر کوئی  عالم یا دین  دار مسلمان نہیں تھا کہ اس کے عمل کو مسلمانوں  کے سر تھوپا جائے،  حقیقت  یہ ہے کہ اگر کوئی لڑکا یا لڑکی اپنے ضمیر کی آواز پر کسی مذہب کو قبول  کرلے اور اپنے ہم مذہب سے نکا ح کر ناچاہے تو ہمارے ملک  کا قانون اس کی اجازت  دیتا ہے اور اس کو تبدیلی مذہب کے لئے شادی نہیں کہا  جاسکتا ، اور اگر موجودہ مخلوط ماحول میں کوئی اپنی پسند کی بناء پر دوسرے مذہب کی لڑکی یا لڑکے سے رشتہ کرتا ہے تو اس کا مذہب سے کوئی تعلق نہیں  ،اور کم سے کم ہندوستان میں ایسے  واقعات بہت پہلے سے ہوتے آئے ہیں اور اب بھی ہورہے ہیں ، خود مہاتما گاندھی جی  کے خاندان میں اس کی مثال موجود ہے۔

 

Facing Radical Islam  اسلام کی انتہا پسندانہ تعبیر کا مقابلہ: اعتدال پسند مسلمان جہادی نظریات کے رد میں اسلامی اعتدال پر مبنی ایک معقول نقطہء نظر پیش کریں! اقوام متحدہ میں سلطان شاہین کا خطاب
Sultan Shahin, Editor, New Age Islam

ہم اعتدال  پسند مسلمانوں کی اکثریت کو آج ایک تشویش لا حق ہے۔ اور وہ یہ ہے کہ کیا جمہوریت، امن اور تکثیریت کے خوگر اعتدال پسند مسلمان عالمی مسائل میں اپنا کوئی نقطہء نظر پیش نہیں کر سکتے؟ ڈیڑھ ارب مسلمانوں میں سے محض ایک محدود طبقہ ہی قرآن وحدیث میں غیر مذاہب اور دیگر مکاتب فکر کے معصوموں کے قتل کا جواز پیش کر رہا ہے۔ نتیجہ یہ ہے کہ آج اسلام یا اسلام پسندی کو دہشت گردی کے مساوی قرار دیا جا رہا ہے، کیوں کہ مسلمانوں کی اکثریت آج اس کے تئیں خاموش ہے۔ 9/11 کے بعد سے اب تک 13 برس گزر چکے ہیں۔ مگر اسلامی دہشت گردی کا خوف پہلے سے کہیں زیادہ مہیب، منتشر اور پیچیدہ تر ہو چکا ہے۔ ایسا لگتا ہے کہ دنیا نے دہشت گردوں سے فوجی وعسکری طور پر تو خوب جم کر مقابلہ کیا، مگر نظریاتی وفکری طور پر ان کے چیلنجز کے مقابلہ کےلئے کوئی پیش رفت نہیں ہوئی۔ مذہبی انتہا پسندی کا یہی وہ نام نہاد اسلامی فلسفہ ہے جو آج مختلف شکلوں میں پروان چڑھ رہا ہے۔ کبھی القاعدہ کے نام سے، کبھی طالبان کی صورت میں، کبھی بوکوحرام کی شکل میں تو کبھی جبہۃ النصرۃ یا پھر آج کے داعش کے نام سے۔ اس شدت پسندانہ فسلفہ نے صرف انہی تنظیموں کو جنم نہیں دیا بلکہ بعض ایسے آزاد عناصر بھی پیدا کئے جو ان سے بھی کہیں زیادہ مہلک اور تباہ کن ثابت ہو سکتے ہیں…….

Will the State remain Safe in Case of Insurgency  کیا ریاست شورش سے محفوظ رہ پائے گی؟
Mujahid Hussain, New Age Islam

ایسے محسوس ہونے لگا ہے کہ پاکستان کی ریاست تیزی کے ساتھ شورش زدہ ریاست کا روپ دھار رہی ہے۔سیاسی بے چینی اپنے عروج پر ہے اور مذہبی انتہا پسندی کا زور ٹوٹنے کا نام نہیں لے رہا۔مذکورہ شورشیں ایک طرح سے متوازی سفر طے کرنے میں مصروف ہیں۔وزیراعظم اور اُن کی جماعت کا کہنا ہے کہ رواں سیاسی شورش خاص اہمیت کی حامل نہیں اور اس کی طرف توجہ دینا وقت ضائع کرنے کے مترادف ہے جب کہ آرمی چیف جنرل راحیل شریف متعدد بار یہ اعلان کر چکے ہیں کہ مذہبی انتہا پسندی کی علامت طالبان اور اُن کے ساتھیوں کو وزیرستان سے کھدیڑ دیا گیا ہے اور فوج اِن کا پورے ملک میں پیچھا کرے گی۔

 

راقم کا نئے چیف کے لیے اِس لیے صرف ایک مشورہ ہے کہ وہ کسی میرے جیسے صحافی بھائی، کسی پارٹ ٹائم دانشور اور کسی اُبھرتے ہوئے دفاعی تجزیہ نگار یا کسی بزرگ ستارہ شناس کا مشورہ نہ مانے۔ اس سے کہیں بہتر ہوگا کہ وہ کچھ وقت اپنے نئے دفتر میں تنہا گزاریں اور دیوار پہ لگی اپنے سے پہلے والے ساتھیوں کی تصویریں دیکھیں، پھر اُن کے کارہائے نمایاں پر نظر ڈالیں اور سوچیں کہ آپ اُن میں سے کس کے نقش قدم پر چلنا پسند کریں گے۔

 

South Asian al-Qaeda, Pakistan and Muslims  جنوبی ایشیائی القاعدہ۔پاکستان اور مسلمان
Nusrat Mirza

بھارت کے ایک سابق سفیر اور لکھاری بہادر کمار نے جنوب ایشیائی القاعدہ کے وجود کے اعلان کے بعد لکھا ہے کہ ’’ہماری ایجنسیاں کتنی ہی مستعد اور کتنی ہی بہادری کے دعوے کیوں نہ کرتی ہوں۔ بھارت کی ریاست ٹوٹ جائے گی اگر مسلم آبادی کا ایک فیصد بھی جہاد میں شامل ہوجائے گا۔ اُن کا کہنا ہے کہ یہ سچائی پر مبنی حقیقت ہے۔ جس کو ہماری سیاسی برادری کو اپنے ذہن نشین رکھنا چاہئے۔‘‘ڈان مرفی CSM عالمی دہشت گردی پر ایک اتھارٹی کی سی حیثیت رکھتے ہیں۔ اُن کا کہنا ہے کہ ’’مسلمان دُنیا میں سلفیوں کو روکنے کا نظام دبائو کا شکار ہے۔ یہ درست ہے کہ بھارتی ایجنسی ان لوگوں کو روکنے کی کوشش کرے گی مگر بھارت خطرہ سے دوچار رہے گا کیونکہ آسام، گجرات اور جموں و کشمیر میں بھارت کے ہندوئوں نے مسلمانوں کو جو زخم لگائے ہیں وہ ناقابلِ علاج ہیں۔ مندمل نہیں کئے جاسکتے اُن زخموں کو بھرا نہیں جاسکتا۔‘‘

 

ہمارے معاشرے میں شادی اور اس  سے پہلے لڑکے اور لڑکی کے ایک دوسرے کو دیکھ لینے سے متعلق دو طرح کے رُجحانات پائے جاتے ہیں ۔ ایک طرف لڑکے، لڑکیوں کو اتنی آزادی ہے کہ وہ کھلے طور پر ایک دوسرے سے ملتے جلتے ، سیر و تفریح کرتے اور اسی کے بہانے حد سے گزر جانے میں بھی عار محسوس نہیں کرتے ہیں ۔ موبائل  اور سوشل نیٹ ورکنگ سائٹس نے اس میں بڑا اہم کردار ادا کیا ہے ۔ کالجوں اور یونیورسٹیوں کے طلبہ اور طالبات  نیز آ زاد گھرانوں میں یہ سب بہت عام او رمعمولی سی بات ہے۔ ظاہر ہے اسلام اس کی اجازت کیسے دے سکتا ہے ، وہ تو ایک ایسے معمولی روزن کو بھی بند کردیتا ہے جس سے مفسد اور زہریلی ہوائیں گھر کے اندر داخل ہوں ۔

Reciting the Holy Qur’an in a Singing Manner  قرآن کو گا گا کر پڑھنا

میری ڈیوٹی ایسی تھی کہ گھر  دیر سے پہنچتا تھا گھر والے آرام کررہے ہوتے ۔ پھر صبح بیگم زور زور سے تلاوت کرتیں جس کی وجہ سے میر ی نیند  پوری نہیں  ہوتی تھی ۔ دل چاہتا تھا کہ میں انہیں تلاوت کا مطلب سمجھاؤں مگر یہ بھی ڈر تھا کہ کہیں یہ بددل ہوکر قرآن کو ہاتھ لگانا ہی نہ چھوڑ دیں۔ بالآخر ایک بار میں نے ہمت سے کام لیا اور ان کے پاس جا بیٹھا ۔ میں نے  کہا  بیگم آج تو اس کا ترجمہ سنائیے جو پڑھا ہے۔ انہوں نے کہا  یہ تو بغیر  ترجمے  کے ہے۔ شادی کے وقت آپ  کے گھر سے یہی دیا گیا تھا ۔

 

Science of Hadith  علم حدیث

حدیثیں یعنی وہ اقوال و اعمال وغیرہ جو رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی طرف منسوب کیے جاتے ہیں اور بسلسلہ روایت کتابوں میں مدوّن کیے گئے ہیں، ان کے متعلق ابتداء ہی میں بحث شروع ہوئی کہ ان کی حیثیت دینی نہیں ہے بلکہ تاریخی ہے، جس کی بناء اس پر تھی کہ ان کی نسبت آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم کی طرف غیر یقینی ہے۔ کیونکہ خبروں کی کیفیت یہ ہے کہ وہ  صبح سے شام تک میں تبدیل ہو کر کچھ سے کچھ ہوجایا کرتی ہیں اور جتنے بڑے آدمی کی باتیں بیان کی جاتی ہیں، اتنا ہی ان میں تبدّل و تغیر کا امکان زیادہ ہوتا ہے اور نبی صلی اللہ علیہ وسلم دنیا میں سب سے بڑے آدمی تھے ۔ چنانچہ پہلے ہی صدی ہجری سے اُمت میں ایسے طبقات پیدا ہوگئے ، جو اپنے اغراض کے لئے حدیثیں بنابنا کر حضور صلی اللہ علیہ وسلم کی طرف منسوب کرنے لگے ۔  

 

Fighting Jihadism With Heads Buried In The Sand!  جہادی   نظریہ کے خلاف جنگ میں سردمہری کا رویہ
Sultan Shahin, Editor, New Age Islam

یقینا جیسا کہ کچھ سابق جہادیوں نے انکشاف کیا ہے کہ جہادی علماء نے ان تمام شبہات کے مؤثر ازالہ کا کام کر لیا ہے جو امن و سلامتی اور ہمدردی وغمگساری سے متعلق قرآنی آیات اور احادیث نبوی کی بنیاد پر بہت سے دماغوں میں پیدا ہو سکتے ہیں۔ قرآن میں امن سے متعلق آیات اور آپ ﷺ کے اقوال بے شمار ہیں جو بے قصوروں کے قتل  کی ممانعت پر وارد ہیں ۔ آخر ہمارے بچے روشن خیال، ترقی پسند، اعتدال پسند، صوفی بریلوی گھروں سے نکل کر جنت کی طلب میں جہادی مشن سے کیوں جڑتے چلے جا رہے ہیں؟ وجہ یہ ہے کہ ہمارے پاس جہادی نظریات کا مقابلہ کرنے کے لئے کوئی موثر طریقہء کار اور تردیدی نظریہ نہیں ہے ۔ جب حالات یہ ہیں تو ہم کیسے جان سکتے ہیں کہ جہادی نظریہ  کیا ہے۔ یہاں تک  کہ نیو ایج اسلام کے قارئین بھی یہی کہتے ہیں کہ سرد مہری اختیار کرلو، سب کچھ ٹھیک ہو جائے گا۔ لیکن دوستو! حالات بہتر نہیں ہورہے ہیں، بلکہ بد سے بدتر ہوتے جارہے ہیں۔ آئیے ایک لمحہ کے لیے اسکاٹش پرائویٹ اسکول کی طالبہ اقصیٰ محمود کے بارے میں سوچیں!

 

Remember Me in Your Supplications!  دعاؤں میں یاد رکھئے

جس قوم کے وزراء کا یہ حال ہو اس قوم کا دنیا میں کیا مقام ہوسکتا ہے؟ وہی مقام جو آج ہمارا ہے  یا کوئی اور ۔ ہم نے ہزار بار لکھا  ہے کہ وزارت کیا اسمبلی  کی ممبر شپ کے لئے جو اُمید وار کھڑا ہو اُسے ذرا سا انسانیت کے ترازو پر تولاجائے کہ پورا اترتا ہے یا یہ دعاؤں پر گاڑیاں چلایا کرے گا۔ سنا تھا کہ آج کل ہوائی  جہاز ہائی جیک ہونے سے بچانے کے لئے دو تین کمانڈوز بھی  جہاز میں ہوتے ہیں ۔ اب دو تین ملنگ ، فقیر بھی جہازوں میں بٹھانے چاہییں سنا ہے یہ بہت پہنچے ہوئےبزرگ ہوتے ہیں، اسی لئےمسافروں کو بھی بہت جلد منزل پر پہنچا دیتے ہیں ۔

 

Al-Qaida’s Tape Announcing Formation of Qaiadat ul Jihad in South Asia   القاعدہ کا قیادت الجہاد کے قیام کا اعلان روضۂ رسول صلی اللہ علیہ وسلم کے انہدام کی سازش کی پردہ پوشی ہے

حکومت ہند اس غلط فہمی میں بالکل نہ رہے کہ داعش یا القاعدہ کا ہندوستان میں اثر نہیں ہے بلکہ اس سچائی پر دھیان دے کہ ذہنی طور پر ایسی فکر اور ایسے عمل سے قربت رکھنے والے لوگ موجود ہیں اور وہ کسی کمان کے منتظر رہے ہیں اس لئے حکومت پر فرض ہوتا ہے کہ وہ سازش کو دیکھے ۔ ہم یہ دعویٰ کرنے میں ابھی تک بجا ہیں کہ ہندوستانی مسلمان عالمی جہاد کا حصہ نہیں ہے لیکن تین حالیہ چھوٹے چھوٹے واقعات اس طرح کا اشارہ کر رہے ہیں کہ ہم قصابوں سے کام نہیں لے سکتے…..حکومت اس غلط فہمی میں ہے کہ ہندوستان میں داعش یا القاعدہ کا وجود نہیں ہے، حالاں کہ ان تنظیموں کے حامی تیار کئے جا چکے ہیں اور انہیں کسی کمان میں لانے کی ضرورت کے تحت یہ اعلان کیا گیا ہے ۔ ہندوستان میں ایک غیر ملکی کٹر پنتی انتہاپسندانہ فکر نے آزادی کے بعد سے اب تک پے در پے بننے والی مرکزی اور صوبائی سرکاروں کی ملی بھگت سے اپنا بنیادی ڈھانچہ تیار کر لیا ہے ۔ اب صرف اسے متحرک کرنے کی ضرورت محسوس کی جا رہی تھی اور کسی ضرورت کی تکمیل کے لئے الظواہری ٹیپ آیا جس کے اوریجنل ہونے کی تصدیق بھی ہو چکی ہے۔ ستمبر  2013 میں حیدرآباد میں ایک جلسے میں لکھنؤ کی ایک دینی درسگاہ سے وابستہ عالم دین کی تقریر بھی محل نظر ہے اور وہ عوامی بیانات بھی جس میں بین الاقوامی سطح پر سرگرم انتہا پسندی کی کھلی حمایت کا مظاہرہ کیا گیا ہے…

 

Need for the Establishment of Islamic System  اسلامی نظام کے قیام کی ضرورت اور اہمیت

اسلامی نظام کے منقرض ہونے کے بعد اُس دور کے علماء کے سامنے یہ مسئلہ درپیش ہوا کہ اللہ تعالیٰ کی اطاعت تو قرآن کے ذریعے کی جاسکتی ہے لیکن حضور صلی اللہ علیہ وسلم کی اطاعت کس طرح سر انجام دیں؟ مسلمان اگر خوش قسمت ہوتے، تو وہ اس اسلامی نظام کو دوبارہ جاری کردیتے اور اس نظام کی معرفت اللہ و رسول کی اطاعت ادا کردی جاتی، لیکن اس دور کے علماء سے یہ لغزش ہوئی کہ انہوں نے اسلامی نظام قائم کرنے کے بجائے ، رسول کی اطاعت کو روایات کی طرف منتقل کردیا اور اس طرح انہوں نے اسلامی نظام کے قیام کا دروازہ ہمیشہ ہمیشہ کے لئے بند کردیا اور اسی وجہ سے انہوں نے روایات کو بھی وحی الہٰی کا درجہ دے دیا لیکن چونکہ روایات وحی الہٰی نہیں ہیں ۔

 

How to Make Homo Sapiens Even Better?  !انسانی نسل کو بہتر بنایا جا سکتا ہے
Asad Mufti

ہالینڈ کے ایک ممتاز سائنس دان ہنس لونت نے کہا ہے کہ بنی نوع انسان کی اصلاح کے لئے ضروری ہے کہ اب اس ’’علم ‘‘ کا از سر نو جائزہ لیا جائے۔‘‘انسانی نوع کی اصلاح کا علم‘‘کا مطلب ہے کہ جین(GENE) کے استعمال سے نسل انسانی کو بہتر بنایا جائے ۔سائنس دانوں کا یہ بھی کہنا ہے کہ اس علم سے فائدہ اٹھا کر بہتر سے بہتر انسان تخلیق کرنے میں کوئی حرج نہیں اور مستقبل میں لوگ ایسا کرنا چاہیں گے۔ اکیسویں صدی میں اس خیال کو گزشتہ صدی سے زیادہ قبولیت عام حاصل ہوئی ہے کہ جنیات کے ذریعے انسانی نسل کو بہتر بنایا جا سکتا ہے اور یہ کوئی پیچیدہ معاملہ یا خدا کے کاموں میںمداخلت نہیں تاہم 1930ء کی دہائی میں ’’نسل انسانی کی اصلاح‘‘ کا آئیڈیا کچھ زیادہ کامیاب نہ ہو سکا اور اس کی وجہ نازی جرمنی کو ٹھہرایا گیا۔

 

Lessons in the Fate of Failed Kings  شاہ جہاں وقت
Samiullah Malik

دولت کی ہوس اور باہمی انتشار نے کام دکھایا ۔ ان کوتاہیوں نے کہاں کہاں ملتِ اسلامیہ کا راستہ نہیں روکا ، کیا کیا زخم نہیں کھائے ہم نے جہاں بھی شکست کھائی مڑ کر دیکھا تو کمیں گاہ میں کچھ اپنے نظر آئے ۔ حرص وہ بلا ہے جو انہیں  سوچنے کی مہلت تک نہیں  دیتی کہ بے حد و حساب دولت کس کام آئے گی، خاص طور پر وہ جس کےانبار غیر ملکی بینکوں میں لگائے گئے، چوری چھپے کے کھاتوں میں دھرے ہیں ۔ باہم خلفشار بھی کہاں کم ہوا، کس نے کس کی پیٹھ میں چھرا نہیں گھونپا ، اپنے پرائے جس کا داؤ لگا وہی موقع پاتے ہی اپنے کرم فرماؤں پر چڑھ دوڑا اقتدار تو دولت سے بھی بری بلا ہے۔

 

Eleven Days in the Spiritual City of Istanbul-Part- 13  (روحانیوں کے عالمی پایئہ تخت استنبول میں گیارہ دن حصہ  (13

عصر کی نماز اسمٰعیل آغاز میں پڑھی ۔ ابھی نماز سے فارغ ہی ہوا تھا دیکھا کہ ہاشم دو نقشبندی درویشوں کے جلو سیں میری طرف آرہے ہیں۔ ان دونوں حضرات نے سفید جبوں پر سبز پگڑیاں باندھ رکھی تھیں جس کے اندر سے نقشبندی انداز کی ٹوپیاں جھانک رہی تھیں ۔ اب جو ذرا غور سے دیکھا تو پتہ چلا کہ ان میں ایک تو وہی  کا آدم خیل کے اللہ یار صاحب  ہیں جن سے ہفت مجالس  کے دوران گاہے بگاہے ملاقات ہوتی رہی  تھی، او رہماری اور ہاشم کی گفتگو میں وقتاً فوقتاً بیٹھ جایا کرتے تھے ۔ لیکن تب وہ ایک عام سالک کی حیثیت سےصرف ٹوپی اور جبہّ میں نظر آتے تھے ۔ آج جو انہوں نے نقشبندی  صوفیاء  کا باقاعدہ یونیفارم زیب تن کیا اور پھر سبزرنگ کی پگڑی خاص پاکستانی اہل سنت کے انداز سے باندھی تو انہیں بیک نظر پہنچا ننے میں دشواری ہوئی ۔ فرمایا شیخ  حمود کے کمرے میں چائے کا اہتمام ہے۔

 

قرآن مجید میں کل 114 سورتیں ہیں جن کو دو درجوں میں رکھا جا سکتاہے۔ طویل سورتیں اور مختصر سورتیں ۔سب سے چھوٹی سورت تین آیتوں پر مبنی ہے اور طویل ترین سورت البقرہ ہے جو 286آیتوں پر مشتمل ہے۔ طویل سورتوں میں ایک سے زیادہ موضوعات پر خدائی احکام اور معلومات فراہم کی گئی ہیں اور مختصر سورتیں کسی خاص موضوع اور اس سے متعلق باتوں پر مبنی ہیں۔ذیل میں ہم چند مختصر سورتوں کا مطالعہ پیش کرتے ہیں جن میں خدا کی طرف سے نازل کی گئی چند بنیادی اسلامی احکام کو پیش کیاگیا ہے جس سے ایک مثالی اسلامی سماج اور مسلمانی کردار کی تشکیل مقصود ہے۔یہ سورتیں مختصر ضرور ہیں مگر ان میں جو پیغامات پیش کیے گئے ہیں وہ کم اہم نہیں ہیں بلکہ وہ اسلام کے بنیادی پیغامات ہیں اور انہیں نظر انداز کرکے کوئی مسلمان مومن نہیں بن سکتا۔

 


Get New Age Islam in Your Inbox
E-mail:
Most Popular Articles
Videos

The Reality of Pakistani Propaganda of Ghazwa e Hind and Composite Culture of IndiaPLAY 

Global Terrorism and Islam; M J Akbar provides The Indian PerspectivePLAY 

Shaukat Kashmiri speaks to New Age Islam TV on forced conversions to Islam in PakistanPLAY 

Petrodollar Islam, Salafi Islam, Wahhabi Islam in Pakistani SocietyPLAY 

Dr. Muhammad Hanif Khan Shastri Speaks on Unity of God in Islam and HinduismPLAY 

Shaukat Kashmiri speaks to New Age Islam TV on impact of Sufi IslamPLAY 

Shaukat Kashmiri speaks to New Age Islam TV on KashmiriyatPLAY 

Shaukat Kashmiri speaks to New Age Islam TV on Reality of "Azad" KashmirPLAY 

Shaukat Kashmiri speaks to New Age Islam TV on Kashmir IssuePLAY 

NewAgeIslam, Editor Sultan Shahin speaks on the Taliban and radical IslamPLAY 

Sultan Shahin, Editor, NewAgeIslam speaks at UNHRC: Islam and Religious MinoritiesPLAY 

Reality of Islamic Terrorism or Extremism by Dr. Tahirul QadriPLAY 

Indian Muslims Oppose Wahhabi Extremism: A NewAgeIslam TV Report- 8PLAY 

Indian Muslims Oppose Wahhabi Extremism: A NewAgeIslam TV Report- 7PLAY 

NEW COMMENTS

  • Verse 9:5 should never be discussed alone since it is modified by 9:4 and 9:6 with  the effect that the command to kill the ...
    ( By Naseer Ahmed )
  • To: Respected Muslim Readers @ New Age Islam   Subject: HIS SECULAR HOLINESS   “Secular Logic,” seems to have reached the end of what he calls, “Fruitful Discussion.” Not sure, what he ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • So its come down to semantics now.
    ( By secularlogic )
  • Mr Yunus,It is alright. I am not offended. "Believers" and "Muslims" has become so synonymous that one has to make a special effort to ...
    ( By secularlogic )
  • To: Respected Muslim Readers @ New Age Islam   Subject: NAY, BUT YE WILL COME TO KNOW   Knowing the deadly mental syndrome known as “Indifference,” which has plagued the Muslim minds, ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • To: Respected Muslim Readers @ New Age Islam   Subject: THE TRANSLATION OF QUR’ANIC VERSE 9:5   As-Salaam Alay-Kum   From the two words “Kill” to “Slay” used by the Islamic scholars ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • To: Respected Muslim Readers @ New Age Islam   Subject: THE TRANSLATION OF QUR’ANIC VERSE   As-Salaam Alay-Kum   From the two words “Kill” to “Slay” used by the Islamic scholars with ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • SLAY, KILL, BELEAGER & BESEIGE   POLYTHEISTS, IDOLATORS, PAGANS, MUSHRIKUN & ASSOCIATORS     Sūrah: Al-Tawbah (The Repentance) – Chapter: 9 – Verse: 5   Sahih International: And when the ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Mike has done an admirable job correcting gross misrepresentations of Islamic dicta. Instead of using the Quran as a source book of rules, we ...
    ( By Ghulam Mohiyuddin )
  • Thanks Yunus sahib, for your long comment. Very useful, informative.
    ( By Sultan Shahin )
  • To: Respected Muslim Readers @ New Age Islam   Talking about “Flip-Flop,” here are some of the quotes which will help enlighten all of my fellow Muslims about a mysterious ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • To: Respected Muslim Readers @ New Age Islam   Talking about “Flip-Flop,” here are some of the quotes which will help enlighten all of my fellow Muslims about a mysterious ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Sir, Your oft-repeated mantra that someone has not understood Islam and as such, he or she is ignorant, is an insult to other's intelligence.  You gave ...
    ( By Mohammad Asghar )
  • Dear Secular Logic, My opening words in the last comment; 'believers and Hindus' are technically incorrect and offensive as Hindus are also believers. Sorry ...
    ( By muhammad yunus )
  • Dear Secular,I love both believers and Hindus and all mankind. My (jt) exegetic work which is duly approved and authenticated and under posting at ...
    ( By muhammad yunus )
  • Yunus Saheb,   Fear and Hate drives “Secular Logic,” to continue to thrash any sensible explanations which you submit to him/her attention. Isn’t it a complete insanity?   Beware ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Secular Logic,Just scroll down and see. I have answered the question on uncleanliness twice. The other points are best taken up in greater detail in ...
    ( By Naseer Ahmed )
  • Normal 0 false false false EN-US ...
    ( By muhammad yunus )
  • Mr Naseer Ahmed,I believe I have read that article and we had some discussion about how many people agreed with that definition of Kaafir. ...
    ( By secularlogic )
  • Mr Yunus, I am sorry if pointed questions are making you uncomfortable. Actually, it is pointed questions and pointed answers that are usually more ...
    ( By secularlogic )
  • A good expose of Ayyan Ali is available on alternet.org. http://www.alternet.org/media/anti-islam-author-ayaan-hirsi-alis-latest-deception
    ( By C M Naim )
  • Secular Logic,My article " who is a kafir in the Quran? Part 3 gives a very direct answer.
    ( By Naseer Ahmed )
  • “Satyamev Jayate - Truth alone triumphs”
    ( By muhammad yunus )
  • Dear Secular Logic,Your asking me pointed question: "to unequivocally say that those who worship idols and who practice polytheism commit no sin?"  I am no one ...
    ( By muhammad yunus )
  • The subject of battles covering the Medinian period covered in the following article.What does "Smite at their necks or finger tips meant?" The clear ...
    ( By Naseer Ahmed )
  • Verse 16:106 and related issues covered in my article below:The Law of Al Taqiya in Islamhttp://www.newageislam.com/islamic-ideology/the-law-of-al-taqiya-in-islam/d/8182
    ( By Naseer Ahmed )
  • Verse 65:4 In rare cases menses  may not begin until the age of 18 without any defect  (these girls are statistically speaking outliers) and if ...
    ( By Naseer Ahmed )
  • Dear Mike Ghouse,While I agree with most of what you have written, I also disagree on some of the points.In our search for political ...
    ( By Naseer Ahmed )
  • Hello Yunus Saheb,   As-Salaam Alay-Kum   Subject: WHERE IS THE COMMON SENSE & HUMAN DECENCY?   I keep cautioning you that the “Grand Prosecutor,” like “Secular Logic,” will never ever ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Dear सत्य प्रकाश,   Thank you kindly for a polite reminder about “Thinking” about myself and the religion of Islam.   “Show Us The Way,” is what I wrote ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Save the Girl Child: She is an Asset …….and not a Liability!! – March 12, 2015   Women play an important role in shaping the destiny of our ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Dear Mr, Mohammed Rafiq ,   Are you serious Islam have not caste system ? Just name of sect. you cannot deny about caste system in Islam. ...
    ( By सत्य प्रकाश )
  • This article was written to counter the Sunni narrative according to which the Meccan pagans had no alternative but to accept Islam or be executed irrespective ...
    ( By Observer )
  • Mr Yunus,You yourself are not convinced about whether idolatory is a sin or not. How are you going to convince all Muslims to not ...
    ( By secularlogic )
  • Dear Secular Logic,Your statement that all Hindus believe the God is unseen and one lends credence to my following article that had received some ...
    ( By muhammad yunus )
  • FOR THE SAKE OF BLEEDING HUMANITY   We cannot afford in this heart-breaking time of crisis, to indulge in mutual recrimination; but let us appeal to all God-fearing Mohammedans ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Another Blogger hacked to death in Bangladesh yesterday. Reform is going to be very bloody, very cruel, if it happens at all.
    ( By secularlogic )
  • Kesav Ji,   You tell me about it. I would like to hear your side of the story.   Mohammed Rafiq Lodhia     mohammedrafiqlodhia http://www.wethemoderatemuslims.com http://www.readingisliving.com
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )
  • Apropos Mr.Lodhia,I would like to what is 'unjust about the caste system'?
    ( By Kesav )
  • To: Respected Muslim Readers @ New Age Islam   Subject: NAY, BUT YE WILL COME TO KNOW   Knowing the deadly mental syndrome known as “Indifference,” which has plagued the Muslim ...
    ( By Mohammed Rafiq Lodhia )